کراچی میں کیمیکل فیکٹری میں خوفناک آتشزدگی، 15 افراد جاں بحق

0
80

کراچی(این این آئی)کراچی کے علاقے کورنگی مہران ٹائون میں کیمیکل فیکٹری میں آتشزدگی سے 15 افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ فائر بریگیڈ کے 2 اہلکار زخمی ہوگئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے مہران ٹائون میں واقع کیمیکل فیکٹری میں آگ بھڑک اٹھی، واقعے کی اطلاع ملتے ہی فائربریگیڈ کی گاڑیاں اور رضا کار جائے حادثہ پہنچ گئے، تاہم آگ اس قدر شدید تھی کہ شہر بھر سے فائر ٹینڈر طلب کرلئے گئے ۔ذرائع نے بتایاکہ کیمیکل فیکٹری میں معمول کے مطابق جمعہ کی صبح کام جاری تھا کہ اچانک آگ بھڑک اٹھی۔ ریسکیو حکام کے مطابق 15 سے 20 مزدور فیکٹری کے اندر کام کر رہے تھے، فائر بریگیڈ کا عملہ آگ بجھانے کی کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے تاہم دھواں بھرنے سے اہلکاروں کو مشکلات کا سامنا ہے، آگ کو تیسرے درجے کا قرار دیا گیا ہے۔فائر بریگیڈ حکام نے بتایاکہ مہران ٹائون کی فیکٹری میں جمعہ کی صبح 10 بجے آگ لگ گئی۔ فیکٹری کے تنگ راستوں کے باعث آگ بجھانے میں ریسکیو اہلکاروں کو دشواری کا سامنا کرنا پڑا۔ ابتدائی طور پر فائربریگیڈ کی تین گاڑیوں کو آگ بجھانے کے لیے بھیجا گیا تاہم صورتحال کی سنگینی کے باعث مزید 5 گاڑیاں بھجوائی گئیں۔ چیف فائر آفیسر نے بتایاکہ فیکٹری کی چھت کے راستے میں تالا لگا ہوا تھا جس کے باعث جانی نقصان میں اضافہ ہوا۔ انھوں نے بتایا کہ عمارت کی پہلی منزل پر آگ لگی اور دوسری منزل پر پھنسنے والے مزدوروں کو باہر نکلنے یا چھت پر جانے کا راستہ نہیں ملا۔فائر بریگیڈ حکام نے بتایاکہ فیکٹری کے اندر متعدد مزدوروں کے پھنسے ہونے کی اطلاعات ہیں اور آگ کے بجائے فیکٹری کے اندر دھواں بھر جانے کے باعث مزدوروں کی ہلاکتوں کی خدشہ ہے، اس لئے فیکٹری کی دیواریں گرانے کی کوششیں جاری ہیں۔ریسکیو ذرائع نے بتایاکہ فیکٹری سے اب تک 15 لاشیں نکالی جاچکی ہیں، اور تمام لاشیں جھلسی ہوئی ہیں، جب کہ دھویں کے باعث فیکٹری کے اندر جانا ممکن نہیں ہے۔مرنے والوں میں 2 سگے بھائی بھی شامل ہیں۔ امدادی کارروائی کے دوران فلاحی ادارے کا رضا کار بھی زخمی ہو گیا، لاشوں اور زخمیوں کو جناح ہسپتال منتقل کیا گیا ہے