وزیراعظم کی کرسی پر قابض عمران خان جادو ٹونے سے 22 کروڑ عوام کا ملک چلا رہے ہیں،مریم نواز

0
18

اسلام آباد (این این آئی) پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز نے ایک بار پھر وزیراعظم پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعظم کی کرسی پر قابض عمران خان جادو ٹونے سے 22 کروڑ عوام کا ملک چلا رہے ہیں،عمران خان آئینی وزیراعظم نہیں ہیں، جب ملک کی اہم تقرریاں جادوٹونے اور جنات کرتے ہوں تو پھر اس ملک کیاداروں کا تماشا ہی بنے گا،اتنا ہی جادو ٹونا کامیاب ہے تو عوام کی بھلائی کیلئے استعمال کیوں نہیں کرتے؟،جنتر منتر اتنا کامیاب ہے تو پیٹرول، ڈیزل، آٹا، سستا کریں، جب آپ جنات کے ذریعے یہ سب کریں تو یہ ہی ہو گا، جنات کچھ اور کہہ رہے ہیں اور آپ کا حساب کچھ اور، ایسے لوگوں پر ہنسی آتی ہے، اگریہی طریقہ رہا تو ملک کا اللہ ہی حافظ ہے، عمران کو ووٹ کی عزت یاد آگئی، وہ نواز شریف بننے کی کوشش نہ کریں،شیر کی کھال پہن کر کوئی شیر نہیں بن جاتا، ن لیگ کی جدوجہد عمران خان کے خلاف ہے،عمران خان کی پہچان منتخب وزیراعظم کے خلاف سازش کرنا اور 126 دن کا دھرنا دینا ہے، نوکری چاکری کرنے والے کو صرف نوکری اور چوکری کرنی چاہیے نواز شریف نہیں بننا چاہیے،، عمران خان کو سیاسی شہید بننے نہیں دیں گے ،نیب میں ضمانت منسوخی کی درخواست دینے والے شخص کو21 نہیں 22 توپوں کی سلامی دینی چاہیے،نہ گرفتاری سے ڈرتی ہوں اور نہ جعلی مقدمے سے ڈرتی ہوں، ضمانت منسوخ کریں اور گرفتار کریں ۔بدھ کو یہاں ہائیکورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم نواز نے کہاکہ نیب نے میرے خلاف درخواست دائر کی،میں دیکھنا چاہتی ہوں جس نے ضمانت منسوخی کا کہا ،میں نیب کے ہمدرد کا پوچھنا اور جاننا چاہتی ہوں ،نیب کی درخواست میں کہا گیا کہ میں کیسی آتی کیسے جاتی ہوں؟اس شخص کا چہرہ عوام کے سامنے لانا چاہیے۔ انہوںنے کہاکہ نیب میں ضمانت منسوخی کی درخواست دینے والے شخص کو21 نہیں 22 توپوں کی سلامی دینی چاہیے،نہ گرفتاری سے ڈرتی ہوں اور نہ جعلی مقدمے سے ڈرتی ہوں، ضمانت منسوخ کریں اور گرفتار کریں۔ انہوںنے ایک بار پھر کہاکہ اگر انکو لگتا ہے کہ میں ڈر گئی تو بھول ہے۔ انہوںنے کہاکہ سچ کو ایک دن سامنے آنا ہے ،وہ دن دور نہیں جب سچ کا سورج طلوع ہوگا ۔ انہوںنے کہاکہ نواز شریف نے اپنا مقدمہ اللہ کے سامنے رکھا ۔انہوں نے کہا کہ ایک منتخب وزیر اعظم کو آئین جو حق دیتا ہے اس میں کوئی دو رائے نہیں، لیکن عمران خان نہ آئینی، نہ ہی قانونی اور نہ منتخب وزیر اعظم ہیں، بلکہ قابض وزیراعظم ہیں، وہ جادو ٹونے سے 22 کروڑعوام کا ملک چلارہے ہیں، وزیراعظم آئین کی بجائے جادو ٹونہ اور حساب کتاب سے ملک چلا رہے ہیں، جب ملک کی اہم تقرریاں جادوٹونے اور جنات کرتے ہوں تو پھر اس ملک کیاداروں کا تماشا ہی بنے گا، سمجھ نہیں آتا کہ اگر ان کا جنتر منتر کامیاب ہے تو عوام کی بھلائی کیلئے استعمال کیوں نہیں ہوتا، جنترمنترسیآٹاپٹرول ادویات سستی کیوں نہیں ہوتیں، وہ صرف اہم تقرریوں کیلئے کیوں استعمال ہوتا ہے، کیوں کہ نئی تقرری ملک کا نہیں اپنی ذات کو بچانے کا مسئلہ ہے۔ ایک سوال پر مریم نواز نے کہاکہ آج عمران خان کو بھی ووٹ کی عزت کا خیال آگیا ،نواز شریف عوام کے ووٹ سے اقتدار میں آیا ،نواز شریف نے آئین کے تحفظ کے لیے حکومت کی قربانی دی ۔ انہوںنے کہاکہ ووٹ کی عزت کیلئے جیلیں برداشت کرنا پڑتی ہیں،آپ کو جھوٹے کیسز جلاوطنی برداشت کرنا پڑتا ہے،بے گناہ بیٹی کو اٹک قلعے میں جاتا دیکھنا پڑتا ہے ۔