مقبوضہ جموںوکشمیر میں (کل)ہفتہ کو مکمل ہڑتال کی جائے گی

0
69

سرینگر(این این آئی) بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں و کشمیر میں ممتاز آزادی پسند رہنمائوں میر واعظ مولوی محمد فاروق ،خواجہ عبدالغنی لون اور شہدائے حول کی برسیوں کے موقع پر(کل)21مئی بروز ہفتہ مکمل ہڑتال کی جائے گی۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق ہڑتال کی کال کل جماعتی حریت کانفرنس نے دی ہے جس کا مقصد مقبوضہ علاقے اور بھارت کی مختلف جیلوں میں بند حریت رہنماؤں اور کارکنوں کی غیر قانونی نظربندی کے خلاف احتجاج اور تحریک آزادی کے حوالے سے ان کے عزم وہمت کو خراج تحسین پیش کرنا ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں کشمیریوں کی نسل کشی کے خلاف (کل)ہفتے کے روز احتجاجی ریلیاں نکالی جائیں گی۔ لوگ مزار شہداء عید گاہ جائیں گے اور شہدا ء کی قبروں پر فاتحہ خوانی کریں گے۔ کل جماعتی حریت کانفرنس نے عائمہ کرام اور خطباء سے کہا کہ وہ مساجد میں پانچ وقت کی نمازوں کے موقع پر شہداء کو بھر پور خراج عقیدت پیش کریں۔ نامعلوم مسلح افراد نے میر واعظ مولوی محمد فاروق کو 21 مئی 1990 کو سرینگر میں ان کی رہائش گاہ پر گولی مار کر شہید کر دیا تھا، اسی روز سرینگر کے علاقے حولHawal میں ان کے جنازے کے جلوس پر بھارتی فوجیوں کی اندھا دھند فائرنگ سے ستر سوگوار شہید ہو گئے تھے۔ بارہ سال بعد 21 مئی 2002 کو نامعلوم حملہ آوروں نے خواجہ عبدالغنی لون کو اس وقت شہید کر دیا تھا جب وہ سری نگر کے شہداء قبرستان میں ایک اجتماع سے خطاب کے بعد واپس جا رہے تھے۔