نگراں پنجاب حکومت کو کام سے روکنے کیلئے درخواست سماعت کیلئے منظور

0
301

لاہور( این این آئی) لاہور ہائیکورٹ نے نگراں پنجاب حکومت کو کام سے روکنے کے لئے درخواست سماعت کے لئے منظور کر لی،وفاقی حکومت اور الیکشن کمیشن سمیت دیگر فریقین کو نوٹسز جاری کر دیئے گئے ۔عدالت نے استفسار کیا کہ اگر 90 روز میں الیکشن نہیں ہوتے تو نگراں حکومت کا مستقبل کیا ہوگا؟ جس پر وکیل اظہر صدیق نے کہا کہ اگر 90روز میں الیکشن نہیں ہوتے تو نگراں حکومت ازخود ختم ہو جائے گی اور پرویز الٰہی بطور چیف منسٹر دوبارہ بحال ہوجائیں گے۔دوران سماعت اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل نے درخواست پر اعتراض کیا، جس پر جسٹس شاہد کریم نے پنجاب حکومت کے وکیل سے استفسار کیا کہ آپ کون ہیں؟ اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل نے جواب دیا کہ میں پنجاب حکومت کا نمائندہ ہوں اور جسٹس رضا قریشی اسی نوعیت کی درخواست کو خارج کر چکے ہیں۔جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دیئے کہ عدالت نگراں حکومت کو نوٹس نہیں کر رہی اور عدالت اس معاملے کو آئینی طور پر دیکھ رہی ہے۔واضح رہے کہ شیخ رشید نے اپنے وکیل اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی وساطت سے درخواست دائر کی جس میں موقف دیا کہ نگراں حکومت کی 90دن کی مدت پوری ہو چکی ہے اور آئینی طور پر نگراں حکومت مزید کام نہیں کر سکتی۔درخواست میں استدعا کی گئی کہ عدالت نگراں حکومت کو کام سے روکنے کا حکم دے۔