کورونا مریضوں کی تعداد میںاضافہ احتیاطی تدابیر پر عمل نہ کرنا ہے،ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ

0
71

سرگودھا(این این آئی)پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن پنجاب کے نائب صدر ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ نے کہا ہے کہ کورونا کے مریضوں کی تعداد میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہے۔ جس کی سب سے بڑی وجہ لوگوں کا احتیاطی تدابیر پر عمل نہ کرنا ہے۔ذرائع کے مطابق پی ایم اے کہ ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ کا کہنا ہے کہ اس وقت سرگودھا میں 200 کے لگ بھگ کورونا کے ایکٹو کیسز ہیں۔ جبکہ لاتعداد ایسے مریض ہیں جنہوں نے اپنا کوروناٹیسٹ نہیں کروایا اور کورونا کی وبامیں اضافے کا سبب بن رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بلاشبہ کورونا ایک وبائی شکل اختیار کر چکا ہے لیکن اس میں اہم بات یہ ہے کہ 80 فیصد مریض معمولی علاج معالجے کے ساتھ صحت یاب ہو جاتے ہیں۔ باقی 20 فیصد مریضوں کو ہسپتالوں میں داخلے کی ضرورت ہوتی ہے۔ جن میں اکثریت اگر ہسپتال میں جلد داخل ہو جائیں تو ان کا علاج جلد شروع کر دیا جائے تو وہ صحت یاب ہو جاتے ہیں۔ صرف 2 سے 3 فیصد مریض صحت یاب نہیں ہو پاتے۔ انہوں نے بتایا کہ جو لوگ خشک کھانسی بخار سانس کا پھولنا اور جسم میں درد جیسی علامات میں مبتلاہوں انہیں اپنا کورونا کا ٹیسٹ ضرور کروانا چاہیے۔ کیونکہ اگر وہ ٹیسٹ نہیں کروائیں گے تو ایک مریض 6 سے 10 مریضوں کی بیماری کا سبب بن سکتا ہے۔