کنٹرول لائن کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں مقیم کشمیریوں نے یوم سیاہ منایا

0
35

سرینگر(این این آئی)کنٹرول لائن کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں مقیم کشمیریوں نے27اکتوبر کو یوم سیاہ منایا تاکہ دنیا کو یہ پیغام پہنچایا جائے کہ بھارت نے ان کے مادر وطن پر غیر قانونی طورپر اور ان کی امنگوں کے برعکس قبضہ کررکھا ہے۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق 27اکتوبر کو سرینگر اورمقبوضہ کشمیر کے دیگرعلاقوں میں مکمل ہڑتال کی گئی جس کی اپیل کل جماعتی حریت کانفرنس ، میرواعظ عمر فاروق کی زیر سرپرستی حریت فورم ، ڈیموکریٹک فریڈم پارٹی اور دیگر آزادی پسند تنظیموںنے کی تھی۔ نوہٹہ اور سرینگر شہر کے دیگر علاقوں میںحریت پسندوں نے پاکستانی پرچم لہرائے اورپاکستانی نقشوں والے پوسٹرز چسپاں کئے گئے جن میں پورے جموں و کشمیر کو پاکستان کا حصہ دکھایا گیا ۔قابض انتظامیہ نے اکتوبر 1947ء کے حملے اور مودی کی زیرقیادت فسطائی بھارتی حکومت کی طرف سے 5 اگست 2019 کو کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کئے جانے کے خلاف احتجاجی مظاہروں ، ریلیوں اور سیمینار زکو روکنے کے لئے مقبوضہ علاقے کے طول وعرض میں بھاری تعداد میں بھارتی فورسز تعینات کررکھی ہیں۔بھارتی فوج نے 1947 ء میں آج ہی کے دن کشمیریوں کو غلام بنانے کے لئے ریاست جموں و کشمیر پر حملہ کیا تھا۔مسلسل مظالم کے باوجود بھارت غیر قانونی طورپر اپنے زیر قبضہ جموںو کشمیر کے بہادر عوام کے عزم کو توڑنے میں ناکام رہا ہے جو حق خود ارادیت کے لئے جدوجہد کررہے ہیں ۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں