بجٹ سے پہلے منی بل پر سینیٹ تجاویز حاصل کرنا آئینی تقاضاہے، بابر اعوان

0
18

اسلام آباد (این این آئی) مشیر برائے پارلیمانی امور ڈاکٹر بابر اعوان نے منی بل کے حوالے سے احسن اقبال کے بیان پر حکومت ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بجٹ سے پہلے منی بل پر سینیٹ تجاویز حاصل کرنا آئینی تقاضاہے۔ اپنے بیان میں بابر اعوان نے کہاکہ انکم ٹیکس ترمیمی آرڈیننس یکم اپریل کو قومی اسمبلی میں پیش کیاگیاتھا،ایوان نے ترمیمی بل قائمہ کمیٹی خزانہ کے سپرد کیا۔ انہوںنے کہاکہ یہ منی بل ہے جسے سینیٹ میں پیش کرنا آئینی تقاضا ہے،سینٹ ترمیمی بل پر 14 دن میں اپنی تجاویز دیگا،۔ انہوںنے کہاکہ نیا بجٹ 11 جون کو قومی اسمبلی میں پیش ہونیکا امکان ہے،بجٹ سے پہلے منی بل پر سینیٹ تجاویز حاصل کرنا آئینی تقاضاہے۔ انہوںنے کہاکہ گذشتہ دو ادوار میں آرڈیننس کے ذریعے انکم ٹیکس ایکٹ میں ترمیم ہوتی رہی ہے،موجودہ حکومت نے نیا کچھ نہیں کیا ہے۔مشیر پارلیمانی امور نے کہاک ہبروقت بجٹ پیش کرنے کیلئے یہ بل سینٹ میں لے کر جا رہے ہیں،جس دن یہ بل قومی اسمبلی میں پیش ہوا احسن اقبال موجود تھے۔ بابر اعوان نے کہاکہ حکومت معیشت سے متعلق جعلی خبریں پھیلانے والوں کو منہ توڑ جواب دیگی،بابر اعوان