القاعدہ کا نیا اڈا ایران ہے، امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو کا الزام

0
219

تہران /واشنگٹن (این این آئی )امریکی سیکریٹری اسٹیٹ مائیک پومپیو نے الزام عائد کیا ہے کہ عالمی دہشت گرد تنظیم القاعدہ کا نیا اڈا ایران ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے انتہائی قریبی ساتھی مائیک پومپیو نے ایران پر لگائے جانے والے الزام کے حق میں کوئی ثبوت پیش نہیں کیا۔مائیک پومپیو نے کہا کہ القاعدہ نے تہران کے اندر اپنی قیادت کو مرکزی شکل دے دی ہے اور اس وقت ایمن الظواہری کے نائبین وہاں موجود ہیں۔مائیک پومپیو نے نیشنل پریس کلب میں تقریر کے دوران کہا کہ القاعدہ کے پاس ایک نیا ہوم بیس ہے جو ایران ہے۔انہوں نے کہا کہ میں کہوں گا کہ واقعتا ایران نیا افغانستان ہے اور یہ القاعدہ کے اہم جغرافیائی مرکز کے طور پر ہے ،لیکن یہ حقیقت میں بدتر ہے۔مائیک پومپیو نے کہا کہ افغانستان کے برعکس القاعدہ پہاڑوں میں روپوش تھی لیکن القاعدہ آج ایرانی حکومت کے تحفظ کے تحت کام کر رہی ہے۔انہوں نے زور دیا کہ عالمی برادری تہران پر دبا ڈالے اور فوجی کارروائی کا مطالبہ کرنے سے گریز کرے۔دوسری جانب ایران نے امریکی سیکریٹری اسٹیٹ کے متنازع بیان کو مسترد کردیا۔ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے ایک ٹوئٹ میں مائیک پومپیو کے بیان کی مذمت کی اور کہا کہ جنگجی جنون جھوٹ پر مبنی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ اب کوئی بے وقوف نہیں بنے گا جبکہ تمام القاعدہ کے اراکین مائیک پومپیو کے پسندیدہ ایم ای سے آئے تھے اور کوئی بھی ایران سے نہیں تھا۔