ایک وڈیو کے بعد چیئرمین نیب کہیں کے نہیں رہے، بلیک میل ہورہے ہیں ،سعید غنی

0
107

اسلام آباد (این این آئی)صوبائی وزیر سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ ایک وڈیو کے بعد چیئرمین نیب کہیں کے نہیں رہے، بلیک میل ہورہے ہیں ،حلیم عادل شیخ کے خلاف بات کی تو پریس ریلیز آگئی ،میرے بیان کے بعد اب میرے خلاف تحقیقات کا کہا گیا ہے، حلیم عادل شیخ کے پاس کون کی گدڑ سنگھی ہے؟ ،نیب خود حکومت کے ہاتھوں بلیک میل ہوکر ہر کیس پر اثر انداز ہو رہا ہے،نیب مجھے گرفتار کرے میں ضمانت نہیں کرائوں گا، پیر کو نیب دفتر جائوں گا، پیپلزپارٹی نے ماضی میں نہ انتقامی کارروائیاں کی نہ آئندہ کریگی ۔صوبائی وزیر تعلیم نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ ناصر شاہ اور میں نے پریس کانفرنس کی، پریس کانفرنس میں حلیم عادل شیخ کے خلاف دیگر اپوزیشن رہنمائوںکی طرح کارروائی کا مطالبہ کیا،چیئرمین نیب ایک وڈیو کی بنیاد پر بلیک میل ہو رہے ہیں ،اس وڈیو کے بعد چیئرمین نیب کہیں کے نہیں رہے، چیئرمین نیب سے متعلق بات کرنے پر نیب نے اس طرح نہیں دھمکایا،حلیم عادل شیخ کے خلاف بات کی تو پریس ریلیز آگئی اور میری بیان کی مذمت کی گئی،میں نے بات کی تو میرے خلاف کارروائی کا کہا گیا،نیب خود حکومت کے ہاتھوں بلیک میل ہوکر ہر کیس پر اثر انداز ہو رہا ہے۔ انہوںنے کہاکہ میرے بیان کے بعد اب میرے خلاف تحقیقات کا کہا گیا ہے، حلیم عادل شیخ کے پاس کون کی گدڑ سنگھی ہے؟ جو مطالبہ کر رہا ہے کہ حلیم عادل شیخ کو گرفتار کرو اسی کو دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔ انہوںنے سوال اٹھایاکہ چیئرمین نیب کی وڈیو کہیں حلیم عادل شیخ کے پاس تو نہیں ہے؟حلیم عادل شیخ کا نام ای سی ایل میں کیوں نہیں ڈال رہے؟ مجھے دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔