آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت ملک بھر میں یومِ تکریمِ شہدائے پاکستان منایا گیا

0
175

اسلام آباد /راولپنڈی (این این آئی)آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت ملک بھر میں یومِ تکریمِ شہدائے پاکستان منایا گیا۔جمعرات کو مرکزی تقریب جنرل ہیڈ کوارٹرز (جی ایچ کیو) راولپنڈی میں یادگارِ شہدا پر ہوئی جس میں آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر مہمانِ خصوصی تھے۔آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے یادگارِ شہدا پر حاضری دی، پھول رکھے، فاتحہ خوانی اور شہدا کے بلند درجات کے لیے دعا کی۔تقریب میں پاک فضائیہ، پاک بحریہ کے سربراہان، حاضرسروس اور ریٹائرڈ افسران بھی شریک ہوئے جن میں سابق آرمی چیف جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ، سابق چیئرمین جوائنٹ چیفس جنرل ندیم رضا اور دیگر ریٹائرڈ افسران بھی موجود تھے جبکہ اس کے علاوہ چیئرمین رویت ہلال کمیٹی مولانا عبدالخبیر آزاد، مفتی منیب الرحمان، قومی ٹیم کے کپتان بابراعظم اور محمد رضوان سمیت مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والی ممتاز شخصیات اور شہدا کے اہلخانہ نے شرکت کی۔تقریب کا آغاز تلاوتِ کلام پاک سے کیا گیا جس کے بعد قومی ترانے کی دھن بجائی گئی۔آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے یادگار شہدا پر حاضری دی، پھول چڑھائے،فاتحہ خوانی اور شہدا کے بلند درجات کیلئے دعا کی گئی ،نیوی اور پاک فضائیہ کے سربراہان، اعلیٰ عسکری اور پولیس افسران نے بھی یادگار شہدا پر پھول چڑھائے اور فاتحہ خوانی کی۔تقریب میں موجود شہدا کے اہلخانہ اور اسکول کے بچوں نے یادگار شہدا پر پھول رکھے۔دوسری جانب پاکستان ائیر فورس، پاکستان نیول ہیڈ کوارٹرز، فارمیشن ہیڈکوارٹراورپولیس کی شہدا یادگاروں پر بھی تقریبات منعقد کی گئیں اس کے علاوہ چاروں صوبوں کے پولیس ہیڈ کوارٹرز اور دیگر مقامات پر بھی اس حوالے سے تقریبات کا انعقاد کیا گیا ،پاک فوج کے حق میں ریلیاں بھی نکالی گئیں ۔علما کرام نے کہا کہ آزاد فضاؤں میں سانس لینا ہمارے ملک کے شہداء کے مرہون منت ہے جو ہم پر ان کا قرض ہے، آج اتحاد و یگانگت کے ساتھ فاصلوں کو ختم کرنے کی ضرورت ہے۔یوم تکریم شہداء کے موقع پر کیپٹن سلیمان شہید، میجر عزیز بھٹی شہید نشان حیدر اور شہید میجر سرمس رؤف کی قبر پر ورثا اور لوگوں کی آمد کا سلسلہ دن بھر جاری رہا ۔پاک فوج کے دستے نے شہداء کی قبروں پر گارڈ آف آنر پیش کیا اور چادر چڑھائی۔شہریوں کے مطابق ہمارے شہداء ہمارا فخر ہیں اور ان کی تکریم میں کبھی کمی نہیں آنے دیں گے۔دریں اثناء ملتان ریجن میں بھی موجود شہداء کی قبروں پر پاک فوج کے دستے نے گارڈ آف آنر پیش کیا۔اس موقع پر کیپٹن عاطف حسن شہید، حوالدار خرم شہید اور لانس نائیک عبدالحکیم شہید کے ورثا اور شہری بھی موجود تھے۔شہریوں نے کہا کہ ہمارے شہداء ہمارا فخر ہیں اور ان کی تکریم میں کبھی کمی نہیں آنے دیں گے۔گجرات میں یومِ تکریمِ شہداء کی مرکزی تقریب میجر عزیز بھٹی شہید کے مزار پر منعقد ہوئی۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر صفدر نے کہا کہ شہداء ہمارا فخر ہیں۔ڈیرہ غازی خان میں پولیس لائن میں یومِ تکریم شہداء کی تقریب ہوئی جس میں پاک فوج اور پولیس سمیت سول انتظامیہ کے افسران شریک ہوئے۔تقریب میں شہداء اور ملک و قوم کے لیے خصوصی دعائیں مانگی گئیں۔چنیوٹ میں یومِ تکریمِ شہداء کے موقع پر یادگارِ شہداء پر پولیس کے دستوں نے سلامی دی۔اس موقع پر ڈی پی او نے کہا کہ آج کے دن شہدائے پاکستان کی عظیم قربانیوں کو خراجِ عقیدت پیش کرتا ہوں۔فیصل آباد میں زرعی یونیورسٹی میں مرکزی تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں شہداء کے اہلخانہ، ضلعی انتظامیہ، پولیس اور سول سوسائٹی کے افراد شریک ہوئے۔شرکا ء نے ملک کا دفاع کرتے ہوئے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والوں کو خراجِ تحسین پیش کیا۔گوجرانوالہ کی پولیس لائن میں بھی یوم تکریمِ شہداء کی مرکزی تقریب ہوئی جس میں کور کمانڈر گوجرانوالہ لیفٹیننٹ جنرل محمد عامر نے شرکت کی۔تقریب میں آئی جی پنجاب عثمان انور بھی شریک ہوئے اور دونوں افسران نے یادگارِ شہداء پر پھول رکھے اور شہداء کے درجات کی بلندی اور ملکی سلامتی کے لیے دعا کی۔کوئٹہ میں یومِ تکریمِ شہداء کی مناسبت سے سینٹرل پولیس آفس میں تقریب ہوئی جس میں کور کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل آصف غفور، وزیراعلیٰ، صوبائی وزیر داخلہ، آئی جی پولیس اور دیگر افراد نے شرکت کی۔کور کمانڈر، وزیراعلیٰ اور آئی جی نے یادگارِ شہدا پر پھول رکھے۔علاوہ ازیں ضلع لسبیلہ اور ضلع حب میں یومِ تکریمِ شہداء پر تقاریب اور ریلیاں نکالی گئیں۔ریلیوں میں طلبا اور قبائلی عمائدین کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔دیامر میں بھی یوم تکریمِ شہدائے پاکستان منایا گیا جس کی مرکزی تقریب ہائی اسکول اور پولیس لائن میں منعقد ہوئی۔علاوہ ازیں بنوں میں ضلعی انتظامیہ نے پریس کلب سے پریڈی گیٹ تک ریلی نکالی۔دریں اثناء ملک بھر میں سارا دن شہداء کے ایصالِ ثواب کے لیے قرآن خوانی اور دعاؤں کا سلسلہ جاری رہا