بائیڈن انتظامیہ کے وفد کی امارات آمد، سردمہرتعلقات کی بحالی پرگفتگو

0
46

واشنگٹن (این این آئی)امریکی صدرجو بائیڈن نے ایک اعلی اختیاراتی وفد متحدہ عرب امارات کے مرحوم صدر شیخ خلیفہ بن زاید کی وفات پر تعزیت کے لیے ابوظبی بھیجا ہے۔وفد کے دورے کا مقصد یواے ای کے ساتھ سردمہری کا شکار دوطرفہ تعلقات کی بحالی کے لیے بات چیت بھی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق یوکرین پر روس کے حملے کے بعد خلیجی بادشاہتوں کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانے کی امریکی خواہش میں نئی تیزی آئی ہے اور اس نے تیل پیدا کرنے والے خلیجی عرب ممالک کی اہمیت کو ایک مرتبہ پھر اجاگر کیا ہے جبکہ یورپ روس پر توانائی کاانحصار کم کرنا چاہتا ہے۔خلیجی ریاستوں نے اب تک یوکرین تنازع میں فریق بننے سے انکار کیا ہے۔تیل برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک کے دوبڑے رکن سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات نے بھی خام تیل کی بڑھتی ہوئی قیمتوں پر قابو پانے میں مدد کے لیے پیداوار میں اضافے کے مطالبے کی مزاحمت کی جس سے دنیا بھر میں افراط زر میں اضافہ ہوا ہے۔امریکی نائب صدر کمالاہیرس دوسرے اعلی عہدے داروں کے ساتھ اماراتی دارالحکومت پہنچی ہیں۔ان کی قیادت میں آنے والے وفد میں صدر بائیڈن کے قومی سلامتی کے قریب قریب تمام اعلی معاونین شامل ہیں۔ان میں وزیرخارجہ ،وزیر دفاع اور سینٹرل انٹیلی جنس ایجنسی کے سربراہ سے لے کر وائٹ ہائوس کے اعلی حکام شامل ہیں۔